Top ads

انگور کے فوائد – Benefits of Grapes

انگور کے فوائد – Benefits of Grapes


 انگور کے فوائد – Benefits of Grapes

انگور کو طاقت کا خزانہ سمجھا جاتا ہے۔ یہ پھل انسانی صحت کیلئےانتہائی مفید ہے۔ انگور سے کشمش بھی تیارکی جاتی ہے۔بڑے سائز کے انگوروں سے منقّہ تیار کیا جاتا ہے۔ آج ہم انگور کے کچھ ایسے فوائد کے بارے میں ذکرکریں گے جن کو جان کر آپ بھی اس پھل کو اپنی روزمرہ کی غذامیں شامل کیے بنا نہیں رہ سکیں گے۔

 

انگور کے بے شمار فائدے

آنکھوں کے لیے انتہائی مفید

انگور میں شامل پودوں سے حاصل ہونے والے غذائی اجزاء آنکھوں کی بہت سی بیماریوں کا خاتمہ کرنے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔ ایک طبّی تحقیق کے مطابق انگور کا استعمال آنکھوں کی بیماری گلوکوما، کیٹاریکٹ اور ذیابطیس سے آنکھوں کے متاثر ہونے کے امراض میں مفید ہے۔تحقیق کے بعد پتہ چلا کہ انگور میں2 خاص غذائی اجزاء (جنہیں لوٹین اور زیزینتھن کہا جاتا ہے )کی موجودگی آنکھوں کو نیلی روشنی سے متاثر ہونے سے بچاتی ہے۔

 

وٹامن C اور K کا خزانہ

انگور میں قدرت نے بہت سے وٹامنز اور منرلز رکھے ہیں۔ایک کپ انگور یا 150 گرام انگور کے اندر 104 کیلوریز، 27.3 کاربس، 1.1 گرام پروٹین، چکنائی 0.2 گرام، فائبر 1.4 گرام، وٹامن C روزانہ کی مطلوبہ مقدار کا 27 فیصد اور وٹامن K روزانہ کی مقدار کا  28%، تھیامین، پوٹاشیم اور کاپر وغیرہ انگور کو صحت کے لیے انتہائی مفید بنا دیتے ہیں۔

 

اینٹی آکسائیڈینٹ دائمی بیماریوں کا علاج

اینٹی آکسائیڈینٹ ایسے کمپاونڈ ہیں جو پودوں سے حاصل ہوتے ہیں اور ہمارے جسم میں بہت سے اہم کاموں کو سر انجام دیتے ہیں، مثال کے طور پر یہ خراب خلیوں کی مرمت کرتے ہیں اور نئے خلیے پیدا کرتے ہیں۔

جسم میں آکسی ڈیٹیوسٹریس بہت سی دائمی بیماریوں کو پیدا کرتی ہے جن میں دل کی بیماریاں، ذیابطیس اور کینسر جیسے امراض شامل ہیں۔ انگور میں 1600 سے زائد اینٹی آکسائیڈینٹ کمپاونڈ پائے جاتے ہیں جو زیادہ تر اس کے چھلکے اور بیج میں موجود ہوتے ہیں اور آکسی ڈیٹیو سٹریس کا خاتمہ کرتے ہیں اور جسم کو دائمی بیماریوں سے محفوظ رکھتے ہیں۔

 

کینسر کی کئی اقسام سے بچاتا ہے

انگور میں پودوں سے حاصل ہونے والے غذائی اجزا ء ہمارے جسم کو بہت سے کینسر سے بچاتے ہیں خاص طور پر انگور میں ریسویراٹل جیسے کمپاونڈ کی موجودگی اسے بریسٹ اور کولن کینسر کے مرض میں انتہائی مفید بنا دیتی ہے اور ان سے ہمارےجسم کی حفاظت کرتی ہے۔

 

بلڈ پریشر اور کولیسٹرول

انگور کے صرف ایک کپ میں 288 ملی گرام پوٹاشیم پائی جاتی ہے اور یہ منرل بلڈ پریشر کو نارمل رکھنے میں انتہائی اہم کردار ادا کرتا ہے اور اس منرل کی کمی بلڈ پریشر اور دل کے امراض پیدا کرنے کی بڑی وجہ ہے۔

انگور میں برے کولیسٹرول کو کم کرنے کی صلاحیت پائی جاتی ہے یہ ہائی کولیسٹرول کو کم کرتا ہے ۔

 

ذیابطیس میں مفید

انگور اگرچہ بہت زیادہ میٹھا ہوتا ہے لیکن اس کا گلیسمیک انڈیکس 53 ہے یعنی یہ کم گلیسمیک انڈیکس والے ایسے پھلوں میں شامل ہے جن میں موجود میٹھا اور کاربس خون میں شوگر لیول کو چینی کی طرح تیزی سے ہائی نہیں کرتا اور ایک  طبّی تحقیق کے مطابق انگور میں ایسے کمپاونڈ شامل ہیں جو بلڈ شوگر کو نارمل رکھنے میں مدد دیتے ہیں۔

 

یاداشت اور موڈ کو بہتر بناتا ہے

انگور کو دماغ کی صحت کے لیے انتہائمفید  سمجھا جاتا ہے اور یہ یاداشت کو مضبوط بنانے میں مدد دیتا ہے۔ اور ایک تحقیق کے نتیجے میں پتہ چلا کہ روزانہ 250 گرام انگور کھانا قوت فیصلہ کو بڑھاتا ہے اور دماغ کے کسی بھی کام کے متعلق ایکشن لینے کے وقت میں بہتری لاتا ہے۔ ایک تحقیق کے مطابق انگور کا استعمال مُوڈ کو بہتر بناتا ہے ، ڈپریشن کو کم کرتا ہے اور غصے کے اثرات کو کم کرنے کا باعث بنتا ہے۔

 

سر درد میں مفید

طبّی ماہرین کا کہنا ہے کہ آدھے سر کے درد میں بھی انگور کا استعمال شفاء بخش  ہے، اس میں موجود گلوکوز جسم کو فوری توانائی فراہم کر کے سستی دور کرتے ہیں اور دماغ کو سکون پہنچاتے ہیں۔

 

ہڈیوں کے لیے مفید ہے

انگور میں ایسے بہت سے عناصر موجودہیں جو ہڈیوں کی صحت کے لیے مفید مانے جاتے ہیں خاص طور پر اس میں شامل کیلشیم، میگنیشم، وٹامن K، پوٹاشیم اور فاسفورس ہڈیوں کو مضبوط بناتے ہیں اور انہیں کمزور اور بھربھرا ہونے سے بچاتے ہیں۔

 

جوڑوں کے لیے بہترین ہے

ٹیکساس ویمنز یونیورسٹی کی ایک تحقیق کے مطابق انگور کھانے کی عادت گھٹنوں کے جوڑ کی تکلیف سے ریلیف میں مدد دیتی ہے، اس میں موجود اینٹی آکسائیڈنٹس جوڑوں کی لچک اور حرکت کو بہتر بناتے ہیں۔

 

لمبے عرصے تک جوان رکھتاہے

انگور کھانے سے آپ کی جلد تروتازہ اور تندرست رہتی ہے۔ یہ بڑھاپے سے پیدا ہونے والے اثرات کو سُست کرنے میں مدد دیتا ہے اور جوانی کو لمبے عرصے تک قائم رکھتا ہے۔

 

سوزش کا خاتمہ کرتا ہے

انگور قدرتی اینٹی انفلامیٹری خوبیوں کا حامل پھل ہے اور یہ خوبیاں اعضاء کی سوزش کا خاتمہ کر تی ہے۔ دائمی سوزش کئی بیماریوں کی ماں ہے خاص طور پر یہ دل کو زیادہ متاثر کرتی ہے اور ذیابطیس جیسے مرض کو پیدا کرنے کا سبب بنتی ہے اور انگور کے استعمال سے ان سے چھٹکارا حاصل کیا جاسکتاہے۔

 

انگور کب اور کیسے استعمال کئے جائیں؟

انگور کوروزانہ کی خوراک میں شامل کرنا آسان ہے۔ اسے سلاد پر ڈال کرکھایا جاسکتا ہے،  دوسرے پھلوں کی چاٹ کیساتھ کھا سکتے ہیں اور اس کا جُوس بنا کر بھی استعمال کیا جاسکتا  ہے۔ ماہرین کا کہنا ہے کہ پھل صبح کے وقت اور دوپہر کے وقت استعمال کرنا صحت کیلئے زیادہ مفید ثابت ہوسکتا ہے۔

Post a Comment

جدید تر اس سے پرانی

Before post ads

After post ads