Top ads

تازہ مچھلی کی پہچان کیسے کی جائے؟

 

تازہ مچھلی کی پہچان کیسے کی جائے؟

تازہ مچھلی کی پہچان کیسے کی جائے؟

سردیوں کا موسم ہے اور ہر گھر میں مچھلی پکائی جارہی ہے۔ مچھلی تلی ہوئی ہو یا سالن ہو اس کی اشتہا انگیز خوشبو آپ کے منہ میں پانی لے آتی ہے۔ ذائقے اور لذت کے ساتھ ساتھ یہ صحت کے لئے بھی انتہائی فائدہ مند ہے۔ طبّی تحقیق کے مطابق اچھی صحت کیلئے ہفتے میں ایک بار مچھلی لازمی کھانی چاہئے۔ مگر سوال یہ ہے کہ مچھلی خریدتے وقت ہمیں کیسے معلوم ہوگا کہ وہ کھانے کے لیے بہتر اور تازہ ہےیا نہیں؟  آپ تازہ اور اچھی مچھلی اپنے سامنے لگے مچھلی کےڈھیر سے کیسے چنیں گے ؟

تازہ مچھلی کی پہچان


تازہ مچھلی کی پہچان

تازہ مچھلی کی پہچان کے کئی طریقے ہیں

کیا مچھلی کھانے کے بعد دودھ پیا جا سکتا ہے؟

مچھلی کی بو سے پہچان

مچھلی خریدتے وقت سب سے پہلے اس کی  بو کو چیک کرنا چاہئے، اچھی مچھلی کی بو زیادہ بری نہیں ہوتی لیکن اگر بہت بری بو آرہی ہے تو اسکا مطلب ہے کہ یہ مچھلی تازہ نہیں۔

تازہ مچھلی کی پہچان


مچھلی کی آنکھوں سے پہچان

اگر آپ بو سے نہ پہچان پا رہے ہوں تو آنکھوں کو دیکھیں، تازہ مچھلی کی آنکھیں صاف اور چمکدار ہوتی ہیں جبکہ ان میں دھندلا پن اس چیز کی علامت ہے کہ اسے وہاں رکھے بہت دیر ہوچکی ہے۔

تازہ مچھلی کی پہچان


مچھلی کی جلد سے پہچان

مچھلی کی جلد سے بھی اسکے تازہ یا باسی ہونے کا اندازہ لگایا جا سکتا ہے۔ تازہ مچھلی کی جلد چمکدار ہوتی ہے، اگر وہ مدھم ہو تو اسے باسی سمجھا جاسکتا ہے۔اسی طرح تازہ مچھلی کا گوشت اچھا اور سخت ہوتا ہے ،اگر وہ نرم یا پلپلا ہو تو مچھلی تازہ نہیں ہوگی۔

 مچھلی کے گلپھڑوں سے پہچان

 مچھلی خریدتے وقت  اس کے گلپھڑے بھی اس کے تازہ یا باسی ہونے کا پتہ لگایا جا سکتاہے۔ گلپھڑے صاف اور شوخ سرخ رنگ کے ہونے چاہئے۔ اگر گلپھڑوں کا رنگ مدھم اور بھورا ہے تو وہ باسی ہو سکتی ہے کیوں کہ مچھلی کی عمر بڑھنے سے گلپھڑے کا رنگ مدھم اور بھورا ہونے لگتا ہے جبکہ ان میں بو واضح علامت ہے کہ یہ مچھلی کھانے کے لائق نہیں ہے۔

Post a Comment

جدید تر اس سے پرانی

Before post ads

After post ads